البرکات ویلفئیر ٹرسٹ

البرکات ویلفیئر ٹرسٹ   سیمانچل

البرکات ویلفیئر ٹرسٹ   سیمانچل کی ایک پر امن اور منظم تحریک ہے۔ امت کی فلاح و بہبود اور ان کو پسماندگی سے نکالنے کی خاطر 2013ء  میں اس کا قیام عمل میں آیا۔ تب سے تا حال یہ تحریک مختلف شعبہ جات میں مسلسل کام کررہی ہے۔

ڈپارٹمینٹ آف  ایجوکیشن

ادارہ "البرکات ویلفیئر ٹسٹ” کا ایک شعبہ تعلیم کا بھی ہے۔ یہ مشعبہ ختلف طریقوں سے قوم و ملت کے درمیان تعلیمی خدمات انجام دے رہا ہے

دار العلوم فیضان تاج الشریعہ کا قیام

امت کو تعلیمی پسماندگی سے نکالنے کے لیے البرکات ویلفیئر ٹرسٹ کے زیر اہتمام دار العلوم فیضان تاج الشریعۃ کا قیام عمل میں آیا جہاں بہار کے مختلف اضلاع سے درجنوں کی تعداد میں بچے تعلیم حاصل کر رہے ہیں۔ عمدہ کھان پان اور اسٹنڈر رہن سہن کا معقول انتظام۔ ساتھ کھیل کود کے لیے وسیع و عریض پلے گراؤنڈ۔ مشاق قرا، عمدہ حفاظ اور باصلاحیت علما کی زیر نگرانی طلبہ کی تعلیم و تربیت۔ دینی تعلیم کے ساتھ ساتھ دنیوی تعلیم بھی لازمی۔ ایک خصوصیت یہ کہ تکمیل حفظ کے ساتھ ہی جامعہ اشرفیہ مبارک پور، امجدیہ گھوسی، جامعۃ الرضا بریلی شریف اور ہند کے دیگر معیاری اداروں میں درجۂ عالمیت میں داخلہ کے لیے طلبہ کی تیاری کرا دی جاتی ہے

گاؤں گاؤں تعلیمی بیدری مہم

غزالی زماں حضرت علامہ محمد احمد مصباحی حفظہ اللہ تعالیٰ رہنمائے علم و عمل میں رقم طراز ہیں: "ابتدا میں بچوں کو تجوید کےساتھ قرآن کریم پڑھا دیا جائے ۔ وضو  ونماز کے ضروری مسائل اور دعا ئیں سکھا کر ان کی عملی مشق کرائی جائے اور پابندی نماز کی عادت پیدا کی جائے۔ 

پھر اردوزبان سکھا کر اردو کتابوں کے ذریعہ عقائد واخلاق اور عبادات و معاملات کے ضروری اور عام مسائل کی تعلیم دی جائے ۔ اسی کے ساتھ اسلامی عقائد و مسائل ،اسلامی تاریخ اور اہم دینی شخصیات سے بھی آ گا ہی ہو کہ بچے دوسرے ماحول میں جا کر بھی اپنے دین ،دینی معاشرہ اور دینی عقیدہ و عمل سے دور نہ ہو سکیں اور بد مذہبوں ، بے دینوں کی یلغار سے بھی اپنے کو بچاسکیں”۔

الحمد للہ! "البرکات ویلفیئر ٹرسٹ ” غزالی زماں کے پیش کردہ لائحہ کو عملی جامہ پہنانے میں سرگرم عمل ہے۔  "البرکات ویلفیئر ٹرسٹ” کی زیر نگرانی بتعاون قرطبہ انسٹیٹیوٹ کیرلا، فی الحال قریب پچیس درجنوں مکاتب میں، باضابطہ نصاب کے ساتھ تعلیم و تربیت کا سلسلہ جاری ہے۔ مقرر استاذ اور اسکالر سے بچوں کی تعلیمی رپورٹ دیکھی جاتی ہے  اورمتعینہ اوقات  میں بچوں کا امتحان بھی لیا جاتا ہے

Add Your Heading Text Here